میرپور میں قومی تقریبات کمیٹی کے زیراہتمام یوم حق خودارادیت ریلی

میرپور:05جنوری2018
وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ محمد فاروق حیدر خان کی اپیل پر لائن آف کنٹرول کے دورنوں اطراف اور پوری دنیا میں بسنے والوں کی طرح میرپور میںقومی تقریبات کمیٹی کے زیراہتمام یوم حق خودارادیت اس عہد کی تجدید کے ساتھ منایاگیاکہ جب تک مقبوضہ کشمیربھارت کے چنگل سے آزادنہیں ہوجاتااور کشمیر عوام کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حق خود ارادیت نہیں مل جاتا کشمیری اپنی آزادی کی پرامن تحریک جاری رکھیں گے ۔ یوم حق خودارادیت کے سلسلہ میں ضلعی ہیڈکوارٹر پرسب سے بڑی تقریب منعقد ہوئی۔ اس موقع پرڈپٹی کمشنرآفس سے ایڈیشنل کمشنرچوہدری محمد طارق، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنرجنرل راجہ فاروق اکرم خان، اسسٹنٹ کمشنرچوہدری ساجد اسلم ،افسرمال راجہ ایاز احمد خان ،سابق ڈائریکٹر اطلاعات چوہدری محمد رشید،انفارمیشن آفیسر محمد جاوید ملک ،مسلم لیگ ن کے راجہ ناصر اقبال ،مسلم کانفرنس کے جمیل تبسم ،جماعت اسلامی کے راہنما محمد ایوب مسلم ،،پی پی پی کے شاہد راٹھور ،ڈسٹرکٹ بار کے صدر چوہدری شبیر شیریف ایڈووکیٹ ،سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے میاں سلطان محمود ایڈووکیٹ، صدر معلم چوہدری محمد عجائب انجمن تاجراں کے راہنمائوں چوہدری محمدنعیم، سہیل شجاع مجاہد،تنویرغازی، شیخ حمید الحق ،تنظیم جریدہ کے انجینئر راجہ محمود خان ،سابق ڈپٹی ڈائریکٹرڈاکٹر امتیاز ،سابق کونسلر محمد رزاق چوہدری ،اپیکاکے صدر راجہ مسعود سلطان راٹھور، ،لبریشن سیل کے ضمیر نقوی ،سید قیصر شیراز کاظمی، ضہیا مہناس، وکلائ، صحافیوں سمیت دیگر افراد نے کی۔ شرکاء ریلی ہے حق ہماراآزادی، ہم چھین کے لیں گے آزادی، کشمیربنے گاپاکستان، تحریک آزادی کشمیرزندہ باد کے فلک شگاف نعرے لگارہے تھے۔ ریلی میں مختلف سکولوں کے طلباء نے بینرز اور پلے کارڈ اٹھارکھے تھے۔ ریلی ضلع کچہری ،کشمیر پریس کلب روڈ ، علامہ اقبال روڈ سے ہوتی ہوئی چوک شہیداں میں اختتام پذیرہوئی۔ اس موقع پرقومی تقریبات کمیٹی کے سیکرٹری جنرل الطاف حمیدرائونے مختلف قراردادیں پیش کیںجنھیں اتفاق رائے سے منظور کرلیاگیا۔ ان قراردادوں میں اقوام متحدہ سے مطالبہ کیاگیاکہ وہ 05 جنوری 1949 کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق کشمیریوں کوحق خودارادیت دلائیں۔ ایک اورقرارداد میں اقوام متحدہ اورعالمی طاقتوں سے مطالبہ کیاگیاکہ وہ مقبوضہ کشمیرمیں گذشتہ70 سالوں سے نہتے کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم بند کروائیںاورکشمیریوں کے مسلمہ حق خودارادیت کے حصول کے لیے بھارت پردبائوڈالیں۔ایک اور قرار داد میں اقوام متحدہ کی طرف سے مسئلہ کشمیر کے حل میں بے حسی پر شدید احتجاج کیا گیا ، ایک اور قرار داد میں وطن عزیز کے خلاف بیرونی سازشوں کا ڈٹ کر مقابلہ کرنے اور وطن عزیز کے لیے ہر قسم کی جان و مال کی قربانی دینے کا اعادہ کیا گیا ۔ ایک اور قرار داد میں امریکی صدر ڈونلڈٹرمپ کی طر ف سے پاکستان کے خلاف دئیے جانے والے بیانات کی شدید مذمت کی گی اور اس بات کا عہد کیا گیا کہ اگر بھارت سمیت کسی بھی ملک نے پاکستان کے خلاف جارحیت کی تو پوری قوم پاک فوج کے شانہ بشانہ ایک ایک انچ انچ کا دفاع کر ئیگی دہشت گردی کے خلاف اور LOC پر بھارتی جارحیت کا منہ توڑ جواب دینے پر پاک فوج کی جرات اور بہادری کو زبر دست الفاظ میں سراہا گیا ۔ ایک اور قرار دادمیں مقبوضہ کشمیرمیں جاری تحریک حریت کی حمایت اور تحریک آزادی کشمیرکی کامیابی کے لیے ہرقسم کی قربانی دینے کااعادہ کیاگیا۔ ایک اورقراردادمیں حکومت پاکستان اور چیف آف آرمی سٹاف کی طرف سے مسئلہ کشمیراورحق خودارادیت کے لیے جراتمندانہ موقف اختیارکرنے پراہل کشمیرکی طرف سے انھیں زبردست الفاظ میں خراج تحسین پیش کیاگیا۔ ایک اورقراردادمیں حکومت پاکستان کی مسئلہ کشمیرکے حل کے لیے کوششوں کوزبردست الفاظ میں خراج تحسین پیش کیاگیا۔ ایک اورقرارداد میں مطالبہ کیاگیاکہ پاک بھارت مزاکرات میں مسئلہ کشمیرکے اصل فریق کشمیریوں کوبھی شامل کیاجائے تاکہ اس مسئلہ کے دوررس نتائج مرتب ہوسکیں۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ایڈ یشنل کمشنر چوہدری محمد طارق نے کہا کہ ریاست جموں و کشمیر کے دونوں اطراف کے کشمیر ی اقوام متحدہ کی سلامتی کی قراردادوں کے مطابق مسئلہ کشمیر کے حل پر یقین رکھتے ہیں ۔ اقوام متحدہ اپنی قرار دادوں پر عمل کرتے ہوئے کشمیریوں کو ان کا مسلمہ حق خودارادیت دلائے تاکہ بھارت کی طرف سے گزشتہ 70 سالوں سے ان پر ڈھائے جانے والے مظالم ختم ہو سکیں اور کشمیری اپنے مستقبل کا فیصلہ خود کر سکیں ۔ انھوں نے کہا کہ حق خودارادیت کو اقوام متحدہ نے تسلیم کر رکھا ہے لیکن بھارت کشمیریوں کو ان کے پیدائشی حق خودارادیت دینے کی راہ سے فرار ہو رہا ہے اور اس نے طاقت کے بل بوتے پر کشمیریوں کو غلام بنائے رکھا ہے ۔ اس موقع پر جماعت اسلامی کے رہنما محمد ایوب مسلم نے مقبوضہ کشمیر کی آزادی ،پاکستان کی ترقی ، خوشحالی وسلامتی ، عالم اسلام کی کامیابی کی سربلندی کے لیے دعاکی گئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.