عمران طاہر پر تماشائی کے نسل پرستانہ جملوں کی تحقیقات کا آغاز

کیپ ٹاؤن: جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ کا کہنا ہے کہ بھارت کے خلاف چوتھے ایک روزہ میچ کے دوران تماشائی کی جانب سے لیگ اسپنر عمران طاہر پر نسل پرستانہ جملوں کی تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے۔اس حوالے سے جنوبی افریقی بورڈ کی جانب سے ایک بیان جاری کیا گیا جس میں بتایا ہے کہ ہفتے کے روز وانڈرز اسٹیڈیم میں کھیلے گئے میچ میں عمران طاہر پر تماشائی نے نسل پرستانہ جملوں کسے اور اس مبینہ واقعے کے بارے میں انہوں نے سیکیورٹی حکام کو بتایا تھا۔بیان میں کہا گیا ہے کہ عمران طاہر دو سیکیورٹی اہلکاروں کے ہمراہ گراؤنڈ کے اسٹینڈز میں گئے تاکہ اس شخص کی شناخت کی جائے جس نے ان پر جملے کسے اور گالیاں دیں۔یاد رہے کہ 6 ایک روزہ میچز کی سیریز کے چوتھے میچ میں جنوبی افریقا نے بھارت کو ڈک ورتھ لیوس قانون کے تحت پانچ وکٹوں سے شکست دی تھی اور اسی میچ میں یہ واقعہ پیش آیا۔پروٹیز کرکٹ بورڈ کا کہنا ہے کہ وہ سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی اس ویڈیو کے بارے میں بھی آگاہ ہیں جس میں عمران طاہر اسٹینڈز میں تماشائیوں کے آمنے سامنے دکھائی دے رہے ہیں تاہم انہوں نے کسی تماشائی کو چھوا تک نہیں۔خیال رہے کہ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کے قوانین کے مطابق نسل پرستانہ برتاؤ میں ملوث تماشائیوں کو اسٹیڈیم سے بے دخل کرنے اور مزید پابندیوں کے علاوہ قانونی کارروائی کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.