جنوبی افریقہ میں سیاسی بحران،صدر کوعہدہ چھوڑنے کیلئے 48 گھنٹے کی مہلت

کیپ ٹاون( کشمیر لنک نیوز)جنوبی افریقا کی حکمراں جماعت افریقن نیشنل کانگریس نے اپنے ہی منتخب صدر جیکب زوما کو عہدہ چھوڑنے کے لئے 48 گھنٹے کی مہلت دی ہے۔جیکب زوما کو کرپشن اسکینڈلز، معیشت کی بدحالی اور بے روزگاری میں اضافے جیسے الزامات کا سامنا ہے جس پر اپوزیشن نے قبل از وقت انتخابات کا مطالبہ کیا ہے۔جیکب زوما 2009 میں مسند اقتدار سنبھالنے کے بعد دو مرتبہ منتخب ہوئے اور آئندہ سال ان کی صدارت کی مدت پوری ہورہی ہے۔دوسری جانب حکمراں جماعت کے سربراہ سرل رامافوسا نے صدر زوما کی رہائشگاہ پر ملاقات کی اور 3 گھنٹے تک مذاکرات کے دوران انہیں عہدہ چھوڑنے پر قائل کرنے کی کوشش کی تاہم صدر زوما نے عہدہ چھوڑنے سے صاف انکار کردیا۔خیال رہے کہ اس سے قبل بھی افریقن نیشنل کانگریس کے سربراہ صدر جیکب زوما کو عہدہ چھوڑنے کے احکامات جاری کرچکے ہیں جب کہ صدر زوما نے پارٹی کی نیشنل ایگزیکٹو کمیٹی کو کہا ہے کہ انہیں چند ماہ مزید مہلت دی جائے جسے مسترد کیا جاچکا ہے۔سرکاری ٹی وی ایس اے بی سی کے مطابق حکمراں جماعت کی ایگزیکٹو کمیٹی نے صدر جیکب زوما کو اقتدار سے علیحدہ ہونے کے لئے 48 گھنٹوں کی مہلت دی ہے، ایگزیکٹو کمیٹی کا کہنا ہے کہ اگر صدر نے عہدہ نہ چھوڑا تو ان کے خلاف پارلیمنٹ میں تحریک عدم اعتماد لائی جائے گی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں