29

بھارت کے ساتھ تصفیہ طلب امور میں کشمیر سرفہرست ہے، ترجمان دفتر خارجہ

پاکستان خطے کے حوالے سے امریکی اور مغربی پالیسیوں کا خمیازہ بھگت رہا ہے
امریکا نے جہاد کے فلسفے کو اپنی مرضی کے مطابق تبدیل کیا، آج یہ خطرہ پھیل کر تمام اقوام کے لیے چیلنج بن چکا ہے
سی آئی اے کے سربراہ کے دورہ بھارت سے آگاہ ہیں، اپنے قومی مفادات کے تحفظ کیلئے تمام تر اقدامات اٹھا رہے ہیں
بھارت آج 31 سیٹلائٹس خلا میں بھیجنے کا ارادہ رکھتا ہے،خلائی ٹیکنالوجی کے عسکری استعمال اور ایسے اقدامات سے گریز کیا جائے
نئی دہلی سے مسئلہ کشمیر سمیت سیاچن، سرکریک اور دہشتگردی پر بھی مذاکرات کو تیار ہیں
الزام تراشیوں کے بجائے مغرب ذمہ دارانہ کردار ادا کرے، حافظ سعید سے متعلق اقوام متحدہ کی پابندیوں پرمکمل عملدرآمد کر رہے ہیں
دفتر خارجہ کے ترجمان ڈاکٹر فیصل کی ہفتہ وار بریفنگ

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں